7

2018 سے ملک میں بین الاقوامی کرکٹ سرگرمیاں بڑھنے والی ہیں، نجم سیٹھی

ورلڈ الیون کا دورہ صرف کرکٹ بورڈ ہی نہیں بلکہ پورے پاکستان کی ساکھ کو بہتر بنائے گا، نجم سیٹھی۔
لاہور: پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے چیرمین نجم سیٹھی نے کہا ہے کہ اگلے سال سے ملک میں انٹرنیشنل کرکٹ سرگرمیاں بڑھنے والی ہیں۔
لاہور میں آئی سی سی ڈائریکٹر جائلز کلارک کے ہمراہ نیوز کانفرنس کرتے ہوئے پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیرمین نجم سیٹھی نے کہا کہ پاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ بحال ہورہی ہے، اگلے سال سے ملک میں کرکٹ کی سرگرمیاں بڑھنے والی ہیں، ورلڈ الیون سیریز کے لیے جنوبی افریقہ کے 5 کھلاڑی پاکستان آئے ہیں، اب ان کی ٹیم کو یہاں لانے میں زیادہ محنت نہیں کرنا پڑے گی، نیوزی لینڈ کو دورہ پاکستان کیلئیقائل کرنے کی پوری کوشش کریں گے، ورلڈ الیون کے دورے سے دنیا کو اچھا پیغام جائے گا اور صرف پی سی بی ہی نہیں بلکہ پاکستان کا امیج بلند ہوگا۔
نجم سیٹھی نے کہا کہ پاکستان میں کرکٹ کی کھڑکی سب سے پہلے زمبابوے نے کھولی، پی ایس ایل فائنل سے بھی عالمی کرکٹ کو واپس لانے میں مدد ملی، آج پاکستان کی عوام کیلیے خوش آئند دن ہے، ورلڈ الیون نہ آتی تو نہ جانے پاکستان میں کرکٹ کی واپسی میں کتنے سال لگ جاتے۔
آئی سی سی کے ڈائریکٹر جائلز کلارک نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ عالمی کرکٹ کی بحالی کیلئے پاکستانی قوم کو طویل سفر طے کرنا پڑا جس کی یہ سیریز ابتدا ہے، لاہورمیں پی ایس ایل کا فائنل اہم اقدام تھا، پاکستان ٹور کو ممکن بنانے میں جنوبی افریقی کرکٹ بورڈ اور سیکیورٹی حکام کا شکر گزار ہوں، ورلڈ الیون کے دورے کیلئے اینڈی فلاور کا کردار قابل تحسین ہے، 2011 سے پاکستان میں سیکیورٹی صورت حال کا جائزہ لے رہے تھے، پاکستانی حکومت نے سیکیورٹی صورتحال بہتر بنانے کیلئے بہت سرمایہ لگایا، کوشش ہے دیگر ٹیمیں بھی پاکستان کے دورے پر آئیں ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں